خان پور کے علا قہ مو ضع امیر پور میں کو ل پا ور پرا جیکٹ نصب کر نے کے خلا ف احتجاجی مظاہرہ

03-07-2014pti1

 

خان پور (سٹی رپورٹر) خان پور کے علا قہ مو ضع امیر پور میں وفا قی حکو مت کی طر ف سے کو ل پا ور پرا جیکٹ نصب کر نے کے خلا ف مو ضع امیر پور چک 163/164/165سیو ن آر کے سینکڑو ں رہا ئشی افرا د نے پا کستا ن تحریک انصاف کے مرکز ی رہنما میا ں غو ث محمد تحصیل صدر مختیا ر احمد گجر ،اصغر سندھو ،شہبا ز با جوہ ، حاجی عبد الشکور اور دیگر کی قیا دت میں احتجا جی مظا ہر ہ کیا اس مو قع پر خطا ب کر تے ہو ئے میا ں غوث محمد اور دیگر نے کہا کہ یہ منصو بہ تھر کے علا قہ میں اس جگہ پر لگا یا جا نا چا ہیے جہاں کو ئلے کے ذخا ئرمو جو د ہیں مگر پنجا ب کے حکمرا ن محض اپنے کمیشن اور مفا د کی خا طر یہ پرا جیکٹ یہا ں کی 100مر بع ارا ضی پر قا ئم کر نے کے لیے بضد ہیں اگر یہ کو ل پا ور پرا جیکٹ یہا ں لگ گیا تو 10لا کھ سے زائدانسا نو ںکی زند گی کو خطرا ت لا حق ہوں گے انہوں نے کہا کہ جیٹھہ بھٹہ کی 1لاکھ آبادی کے علاوہ خان پور کی 5لاکھ اور فیروزہ ،معین آباد لیاقت پور تک کی آبادی میں رہنے والے افراد میں کینسر جلدی بیماریاں اور ٹی بی جیسے مہلک اثرات پھیل جائیں گے انہوںنے کہا کہ اگر حکمران توانائی بحران کو حل کرنے میں سنجیدہ ہیں تو پاکستان کے ایٹمی سائینسدان ڈاکٹر ثمر مبارک کی تجویز پر عمل کرتے ہوئے تھر کے علاقہ میں زیر زمین یہ منصوبہ قائم کرے یا پھر چولستان کے دور دراز علاقے جہاں سے انسانی آبادی100کلومیٹر دور ہو وہاں پر نصب کیا جائے حاجی عبدالشکور ،حاجی عبدالطیف ،شہباز باجوہ، مرید حسین نمبردار ،بشارت علی چوہدری اور دیگر نے کہا کہ اگر حکومت نے زبردستی اس علاقہ میں کول پاور پراجیکٹ نصب کرنے کی کوشش کی اور ہمیں یہاں سے بے دخل کر کے ہماری زمینوں کو بنجرکرنے اور ہمیں موت کے منہ میں دکھیلنے کی کوشش کی گئی تو بے شک سانحہ ماڈل ٹائون سے بھی بڑا واقعہ پیش آجائے ہم اپنی جانوں کے نذرانے دے کر بھی اپنے علاقہ کو اس منصوبے کی تنصیب سے ہٹا کر دم لیں گے جام منظور لاڑ ،کامران باجوہ ،حاجی مقبول مہر ،اسلم سنگیڑہ ،غلام رسول مہر ،اور دیگر نے کہا کہاگر میاں برادران کو پنجاب میں کول پاور پراجیکٹ نصب کرنے کا شوق ہے تو وہ رائے ونڈ کے ساتھ یہ پراجیکٹ لگوائیں اس علاقے کا بچہ تک اپنے خون کا آخری قطرہ اس منصوبے کو ختم کرنے کے لیے بہانے کے لیے تیار ہے اس لیے حکمران ہوش کے ناخن لیں اور اس منصوبے کو آبادی سے دور منتقل کریں اگر لاشوں کی سیاست کی گئی تو حکمرانوں کو اپنے محلات میں بھی چھپنے کے لیے جگہ نہیں ملے گی افسر شاہی انٹر نیٹ پر موقع ملاحظہ کر کے اتنے بڑے منصوبے کو یہاں لگانے کی تجاویز تو دے رہے ہیں لیکن انہوںنے زمینی حقائق نہیں دیکھے اس موقع پر میاں غوث محمد نے کہا کہ اگر حکومت توانائی بحران کا خاتمہ چاہتی ہے تو ضلع رحیم یار خان کی 5شوگر ملیں 150میگا واٹ سستی بجلی حکومت کو فراہم کرنے کے لیے تیار ہیں اسی طرح ملک کے دیگر حصو ں میں قائم شوگر ملوں سے بھی یہ سہولت حاصل کر کے توانائی بحران کو کم کیا جا سکتا ہے مگر چائنہ سے کمیشن اور شراکت داری کے ذریعے پنجاب کے شوبازحکمران اس خطہ میں تباہی پھیلا کر اپنی نسلوں کے لیے خزانوں کے دروازے کھولنے کے درپے ہیں ویسے بھی ان کی حکومت کے دن گنے جا چکے ہیں موقع پر سینکڑوں افراد نے زبردست احتجاجی مظاہرہ کیا جن میں علاقہ کے نمبرداران ،زمیندار ،کاشتکار ،بزرگ اور بچے بھی شامل تھے جنہوں نے حکومت کے خلاف نعرے بازی کرتے ہوئے کہا کہ انہیں مسلم لیگ ن کو ووٹ دینے کی سز ا دی جا رہی ہے ہم ایسی جمہوری لبادے میں لپٹی بدترین حکومت سے خدا کی پناہ مانگتے ہیں ۔

Related posts

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *